NA 143,PP 187 POLITICS NEWS 1,066

دیپالپور،این اے 143کو خالی نہ چھوڑا جائے ورنہ…پارٹی رہنماؤں نے سخت فیصلہ کرلیا

دیپالپور، این اے 143میں پی ٹی آئی ورکرز کی محنت کو نظرانداز کرتے ہوئے اس کو خالی چھوڑنے پر مقامی رہنما سراپا احتجاج ہیں اس سلسلے میں اس حلقہ کے تمام امیدواروں اور پرانے رہنماؤں سیدعباس رضا رضوی،راؤصفدرعلی خان،سردارشہریارموکل،سیدعلی عباس گیلانی،سیدمراتب علی کرمانی،سیدعلی نوازکرمانی،سیدعلی ریاض کرمانی،سیداعجاز علی کرمانی نے باضابطہ طور پر یس ریلیز جاری کی کہ ”ہم نے مشترکہ طور پریہ فیصلہ کیا ہے کہ اگر پارٹی نے ہم امیدواران میں سے کسی بھی امیدوار کو ٹکٹ جاری کردیا تو دیگر سب امیدواران اس کو جتوانے کیلئے تندہی سے اس کا ساتھ دیں گے اور اگر پارٹی نے اس حلقہ کو اوپن چھوڑا اور کسی دیگر فرد کو پارٹی ٹکٹ دیا تو ہم سب پارٹی لیڈرشپ سے احتجاج کریں گے کیوں کہ اس سے مسلم لیگ ن کے امیدواروں کو تقویت ملے گی۔یادرہے پارٹی کے اس فیصلے پر تحریک انصاف کے سینئر رہنماؤں اور پارٹی ورکرز نے اپنا شدیدردعمل دیا ہے ان کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ پارٹی ورکرز کی کھلی توہین اور سراسرزیادتی ہے اگر پارٹی قیادت نے اس حلقہ میں ٹکٹ جاری نہ کرنے کا فیصلہ واپس نہ لیا تو یہاں پر گزشتہ ایک عشرے سے کی گئی محنت رائیگاں جائیگی ۔ان کا کہنا تھا کہ اگر تبدیلی کے نام پر منظور وٹو جیسے لوگوں کو سپورٹ کا کہاجائے تو یہ اس نعرے کیساتھ بدترین زیادتی ہوگی ۔اس حلقہ کو منظور وٹو کیلئے خالی چھوڑنے سے بہترتھا کہ پی ٹی آئی اپنے امیدوار کھڑے کرکے ہارجاتی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں