hujra crime stories 610

حجرہ میں دو بھائیوں پر وحشیانہ تشدد معاملہ کاایک نیا رُخ سامنے آگیا

گزشتہ روز حجرہ کے ایک گاؤں جیٹھ پور میں بااثر زمینداروں کی جانب سے دو بھائیوں کو کام نہ کرنے کی پاداش میں وحشیانہ تشدد کی خبریں منظرعام پر آئیں تاہم وہاں کے بعض مقامی لوگوں کے مطابق جو کہانی اب تک عوام کو سنائی اور دکھائی جارہی ہے وہ درست نہیں ہے بلکہ اس کے پس پردہ معاملہ یہ ہے کہ ملزمان محمداسلم وغیرہ کوئی بہت بڑے جاگیردار ہرگز نہیں ہیں بلکہ صرف دس ایکڑ زمین وہ بھی ٹھیکے کی ہے اس پر فصل کاشت کرتے ہیں یعنی کہ یہ خود معمولی زمیندار ہیں اور جن لوگوں کو مارا گیا ہے وہ مزدوری کی وجہ سے نہیں بلکہ یہ لوگ اسلم کی ایک بیٹی کو اس کے آشنا کے ساتھ بھگانے میں ملوث تھے جس کا اسلم کو بہت رنج تھا اور اسی جرم کی سزا اس نے ان دونوں کو دی ہے جبکہ مزدوری سے انکار کی خبر غلط ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں