SC banned all indian channels 401

دیپالپور،انڈین چینلزپرپابندی پرعملدرآمد اورغیرقانونی ڈش اینٹینوں کےخلاف کاروائیاں شروع

دیپال پور (تحصیل رپورٹر)چیف جسٹس سپریم کورٹ آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کے انڈین چینلز بند کرنے اورغیر قانونی ڈش انٹینوں کے خلاف کارروائی کے احکامات کی روشنی میں پیمرا، ایف آئی اے اور کسٹم کی پیمرا ریجنل ہیڈ عائشہ منظور وٹو اور ڈائریکٹر ایف آئی اے پنجاب وقار عباسی کی سر براہی میں مشترکہ کارروائی کے دوران قصور، پتوکی، دیناناتھ پھو لنگر، اوکاڑہ، رینالہ، دیپالپور میں غیر قانونی ڈش انٹینے، سی لائن ریسورز سمیت 500 سے زیادہ غیرقانونی آلات برآمد کر کے اپنی تحویل میں لے لئے۔ اس موقع پر پیمرا ریجنل ہیڈ عائشہ منظور وٹو اور ڈائریکٹر ایف آئی اے پنجاب وقار عباسی نے دیپال پور پریس کلب وانجمن صحافیاں(رجسٹرڈ)کے صدر محمد اشفاق چوہدری سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کے انڈین چینلز بند کرنے اورغیر قانونی ڈش انٹینوں کے خلاف کارروائی کے احکامات پر عمل درآمد کرتے ہوئے غیر قانونی ڈش انٹینے اور انڈین چینل پر پابندی کے باوجود خلاف ورزی کرنے والے کسی بھی رعائت کے مستحق نہیں بلا تفرق کارروائی جاری رہے گی انڈیا نے سندھ طاش معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے نئے ڈیم تعمیر کر کے پاکستان کے حصہ کا پانی روک کر وطن عزیز کو بنجر کرنے کی ناپاک کوشش کر رہا ہے اس گھناؤنے فعل کا ہم انڈیا کے چینل بند کر کے منہ توڑ جواب دیں گے اور کسی کو اس حوالے سے خلاف ورزی کی ہرگز اجازت نہیں دی جاسکتی ۔محب وطن شہری بھی اس کارروائی میں اپنا حصہ ڈالیں اور ایسے لوگوں کی نشاندہی کریں جو اس خلاف ورزی میں ملوث ہوں۔ اس کارروائی میں پیمرا ٹیم کے آفیسرز علی حسنین ، عامر بھٹی جبکہ ایف آئی اے کے آفیسرز زوار علی اور محمد شاھد شامل تھے ۔

Subscribe
ہماری تمام سٹوریز اپنے میل باکس میں حاصل کرنے کیلئے سبسکرائب کیجئیے
I agree to have my personal information transfered to MailChimp ( more information )

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.