renala mai aghwa honay wali 5 sala bachi na mil saki 615

پانچ روز گزرگئے ننھی پری شہربانو کا کوئی پتا نہ چل سکا،اعظم ٹاؤن میں سوگ کی سی کیفیت طاری

رینالہ خوردکی ایک بستی اعظم ٹاؤن کے رہائشی ایک مزدورافتخاراحمدکی پانچ سالہ ننھی منی گڑیا شہربانو گزشتہ پانچ روز سے غائب ہے اور اب تک اس کا کوئی پتہ نہیں چل سکا ہے اس کے والدن اور اہل محلہ نے اس اندیشے کا اظہار کیا ہے کہ اسے اغوا کیا گیا ہے.اوکاڑہ ڈائری کے نمائندے کے مطابق یہ ایک انتہائی غریب فیملی ہےجس کا اندازہ اس سے لگایا جاسکتا ہے وہ بیچارہ ریڑھی پر سموسے پکوڑے بناکر بچوں کا پیٹ پالنے کی کوشش کرتا ہے اور اس کیسا تھ اس کی بیوی بھی لوگوں کے گھروں میں کام کاج کرکے گھرکے اخراجات چلانے کیلئے خاوندکا ساتھ دیتی ہے پانچ روز قبل ساڑھےپانچ سالہ شہربانو اپنی دادی سے ملنے کا کہہ کر گئی مگر دادی کے پاس پہنچنے سے پہلے ہی اسے کسی ظالم نے اغوا کرلیا پولیس نے مقدمہ درج کرلیا ہے مگر پولیس اور محلے والوں کی انتھک کوششوں اور تلاش کے باوجود اس کا کوئی پتا نہیں چل سکا ہے ۔شہربانو کی جدائی میں اس کی ماں پر بار بار غشی کے دورے پڑرہے ہیں اور اس کی آہ و بکا اور فریادیں ہر ایک کا دل چیر رہی ہیں یہی نہیں بلکہ پوری بستی میں سوگ کی سی کیفیت طاری ہے اور سبھی شہربانو کی گمشدگی پر غمزدہ ہیں.شہربانو کے چھوٹے بہن بھائی کہہ رہے ہیں انہیں کچھ اور نہیں ان کی بہن چاہئے.اہل محلہ اور اس کے والدین الغرض ہر ایک شہربانو کی سلامتی اور اس کی بخیریت واپسی کیلئے دعا گو ہے .اس کی ماں نے میڈیا سے گفتگو میں جو کہا وہ آپ بھی سنئے جو سن کر یہی دل میں آتا ہے کہ ہائے یہ کیسے لوگ ہیں جو ماؤں کی گودیں اجاڑنے سے بھی نہیں چُوکتے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں