dr amjad waheed exposed pti 902

ڈاکٹرامجدوحید ڈولہ نے پی ٹی آئی کے ”دو نہیں ایک پاکستان ” کے نعرے کی حقیقت بھی کھول کے رکھ دی

ڈاکٹر امجد وحید ڈولہ نے پاکستان تحریک انصاف کو چھوڑنے کیلئے کی گئی کانفرنس میں پی ٹی آئی کو چھوڑنے کی تمام وجوہات دلائل کیساتھ بیان کیں ان میں ایک پاکستان تحریک انصاف کے معروف نعرے ”دو نہیں ایک پاکستان”کے بارے میں بھی انہوں نے اظہار خیال کیا ۔ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کہتے ہیں کہ جب ان کو اقتدار مل جائے گا تب وہ سب کچھ ٹھیک کرلیں گے کیوں کہ ان کے پاس باصلاحیت اور پڑھی لکھی ٹیم ہے لیکن اس پڑھی لکھی ٹیم کا حال یہ ہے کہ وہ پی ٹی آئی کو اپنا ایک لائحہ عمل اور سلوگن بھی نہیں دے سکی۔ عملدرآمد تو بہت بعد کی بات ہے انہوں نے انکشاف کیا کہ دو نہیں ایک پاکستان کا نعرہ دراصل 2004ء کے امریکی انتخابات میں نائب امریکی صدر کے امیدوار جان ایڈورڈ کے”ون امریکہ”کا چربہ ہے ۔اور یہی نہیں بلکہ عمران خان کی مینارپاکستان والی تقریر بھی جان ایڈورڈ کی تقریر کا اردو ترجمہ تھی۔اور اس سے بھی افسوسناک بات یہ ہے کہ پی ٹی آئی نے پچاس لاکھ گھروں اور ایک کروڑ نوکریاں دینے کا جو اعلان کیا وہ بھی جان ایڈورڈ کی تقریر سے لیاگیا ہے ۔اس تقریر کا ترجمہ کرنے والوں میں اتنی بھی اہلیت نہیں تھی کہ ان اعدادوشمار کو پاکستان کے مطابق ٹھیک کرلیتے کیوں کہ امریکی امیدوار نے یہ اعداد وشمار امریکہ کی آبادی کے لحاظ سے دئیے تھے مگر پی ٹی آئی نے اس میں ترمیم کرنے کی بجائے اس کو ہی پاکستان کیلئے بھی قابل عمل قراردے دیا۔اس موضوع پر انہیں نے ایک خوبصورت مصرعہ بھی پڑھاکہ
قافلہ حسین میں ایک حسین بھی نہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں